سپریم کورٹ کے سوال پر وزیر اعظم کے وکیل نے کیا جوا ب دیا جانئے اس خبر میں

اسلام آباد :تحریک انصاف کے ترجمان نعیم الحق نے کہا ہے کہ پاناما لیکس کیس میں سماعت کے دوران جب عدالت نے حکومت کے وکیل سے جواب مانگا تو اس نے کہا کہ حکومت نے دو ،تین دن پہلے میری خدمات حاصل کی ہیں لہذا مجھے جواب دائر کرانے کا موقع دیا جائے ۔سپریم کورٹ کے باہر میڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومتی وکیل سے جب عدالت نے جواب طلب کیا تو اس کے پاس کوئی جواب نہیں تھا ،اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ حکومت ایسی سکیمیں سوچ رہی تھی کہ جس سے وہ سپریم کورٹ کے چنگل سے نکل جائے ۔نعیم الحق نے کہا کہ حکومتی وکیل نے پاناما لیکس کی تحقیقات میں کمیشن کے دائرہ کار کے حوالے سے بھی سوال اٹھا یا ۔ان کا کہنا تھا کہ ہمیں خوشی ہے کہ سپریم کورٹ نے اس کیس کو جلد سے جلد نمٹانے کا عندیہ دیا ۔تحریک انصاف کے ترجمان نے کہا کہ نواز شریف کی شکل میں شیخ مجیب الرحمان پیدا ہو گیا ہے جس نے کے پی کے کو مکمل طور پر پنجاب سے علیحدہ کرنے کی کوشش کی ہے ۔انہوں نے مزید کہا کہ نواز شریف نے پاکستان کی قومیت پر ضرب لگائی ہے ،اس سے جو نفرتیں پھیلیں گی اس کی ذمہ داری بھی نواز شریف پر ہی ہو گی ۔