سیکورٹی ادارے کی گاڑی پر فائرنگ، دو اہلکار شہید

کراچی(نیوزڈیسک) کراچی میں ایک بار پھر بزدل دہشت گردوں نے قانون نافذ کرنے والے ادارے کی گاڑی کو صدر میں پارکنگ پلازہ کے قریب ریڈ زون سے کچھ فاصلے پر فائرنگ کا نشانہ بنایا۔ فائرنگ کے نتیجے میں ایک سیکورٹی اہلکار رزاق شہید ہو گیا جبکہ دوسرے اہلکار خادم کو تشویش ناک حالت میں جناح اسپتال منتقل کیا گیا لیکن وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جانبر نہیں ہو سکے ۔ موٹر سائیکل سوار فائرنگ کے بعد باآسانی فرار ہو گئے جبکہ واقعے کی اطلاع ملتے ہی پولیس و رینجرز کی بھاری نفری جائے وقوعہ پر پہنچ گئی۔ پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لیکر سرچ آپریشن شروع کر دیا ہے اور جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کرنا شروع کر دیئے ہیں۔ پولیس نے 3 عینی شاہدین کو بھی تحویل میں لے لیا ہے۔ جناح اسپتال کی ترجمان ڈاکٹر سیمی جمالی نے دونوں اہلکاروں کی شہادت کی تصدیق کر دی۔ ان کا کہنا تھا شہید اہلکاروں کے سر اور سینے میں گولیاں لگیں۔ وزیراعظم نواز شریف نے کراچی واقعے کی مذمت کرتے ہوئے امن دشمن بزدلوں کے خلاف سخت کارروائی کی ہدایت کی۔ ان کا کہنا تھا دہشت گردوں کو کراچی آپریشن ڈی ریل نہیں کرنے دینگے۔ –